کیا نابالغ مرید ہو سکتا ہے

 


السلام عليكم و رحمة الله تعالى وبركاته 

کیا فرماتے ہیں علمائے کرام و مفتیان عظام اس مسئلہ کے بارے میں کہ پیری مریدی میں اگر مرید نابالغ ہے توکیا اس طرح کی مریدی صحیح ہے ؟اور اگر صحیح نہیں ہے تو کیا جب بالغ ہوجائے تو اس مرید کو اختیار ہے کہ دوسرے سے مرید ہو یا اسی سے مرید ہو بحوالہ جواب ارسال فرمائیں مہربانی ہوگی 

سائل عبدالسبحان کشنگنج

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

وعليكم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ 


الجواب بعون الملک الوہاب 


صورت مسئولہ میں بیعت ہونا درست ہے جبکہ جامع شرائط شیخ سے بیعت کی ہو کہ اس میں ناباغ کا صلاح و نفع ہے اور نابالغ کا ایسا تصرف حق جواز رکھتاہےلہذا شرعاً یہ بیعت جائز ہوگی(فتاوی تاج الشریعہ /ج۲/ص۱۷ کتاب العقائد) 


واللہ ورسولہ اعلم بالصواب 


گدائے حضور تاج الشریعہ احقر العباد محمد ریاض الدین آعظمی رضوی مقام مدھوبنی بھار الھند

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے