ایمان اور عقیدے میں کیا فرق ہے

Gumbade AalaHazrat

سوال
  کیا فرماتے ہیں علمائے کرام اس سوال کے تعلق سے کہ ایمان اور عقیدہ میں کیا فرق ہے نیز تعریفات بھی تحریر کریں مفصل جواب عنایت فرمائے المستفی عبد الماجد رضا قادری رامپور یوپی الہند

       جواب

ایمان وعقیدہ باہم مترادف ہیں چنانچہ اردو کی مشہور لغات
فیروز اللغات میں عقیدہ کا معنی یہ بیان کیا گیا ہے دل میں جما ہوا یقین ایمان(ص٤٨٤) لہذا ایمان اور عقیدہ باہم مترادف ہیں اور ایمان کی تعریف یہ ہےکہ سچے دل سے تمام ضروریات دین کی تصدیق کرے اور زبان سے ان کا اقرار بھی کرے
جیسا کہ شرح عقائد میں ہے الایمان ھو التصدیق بما جاء بہ الرسول صلی اللہ علیہ وسلم من عند اللہ والاقرار بہ(٢٢١) اور اشباہ میں ایمان کی تعریف یہ کی گئ ہے کہ

تصدیق محمد صلی اللہ علیہ وسلم فی جمیع ما جاء بہ من الدین ضرورۃ(١٥٩)
لہذا ایمان اور عقیدہ کی تعریف یہ ہے کہ سچے دل سے تمام ضروریات دین کی تصدیق کرنا اور زبان سے ان کا اقرار کرنا یہی ایمان ہے واللہ ورسولہ اعلم بالصواب 

کتبہ محمد مزمل حسین نوری مصباحی

مقام دھانگڑھا کشن گنج بہار

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے