وہابی دیوبندی کا ذبیحہ کھانا کیسا ہے




             السلام علیکم رحمۃ اللہ و برکاتہ

کیا فرماتے ہیں علماٸے کرام و مفتیان کرام اس مسٸلہ کے بارے میں کہ اگر وہابی یا دیوبندی نے جانور ذبح کیا تو اس کا کھانا کیسا ہے برائے مہربانی مکمل طور پر جواب عنایت فرمائیں عین نوازش ہوگی

             الســــاٸل محمد عطاء وارث

_____________________________________________
       وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

           الجوابـــــ بعون الملکـــــ الوھاب

وہابی،دیوبندی وہ ہے'جو گستاخ رسول ہواور ضروریات دین کا منکر ہونے کی وجہ سے کافر ومرتد ہیں انکا ذبیحہ حرام ومردار ہے اور وہ گوشت فروخت کرے تو اس کا خریدنا حرام اور کھانا بھی حرام ہے_ (کتب فقہ وفتاوی) اور فتاویٰ ہندیہ میں ہے' کہ لا توکل ذبیحۃ اھل الشرک والمرتد (ج5:ص285)ہاں اگر کوئی صرف نام کا وہابی ہے نیاز وفاتحہ نہیں کرتا ہے مگر دیگر معمولاتِ اہلسنّت کو بدعت بھی نہیں سمجھتا ہے، تو اسکا ذبیحہ حلال ہے (ماخوذ فتاویٰ رضویہ ج8؛ص330)


              واللہ تعالیٰ اعلم باالصواب

     از قلــــم؛محمد عمران رضا ساغر صاحب قبلہ

               اســـلامی مـــعلــومـات گـــــروپ 

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے