4.15.2020

ناپاکی کی حالت میں روزہ رکھنا از روئے کیسا ہے

           السلام علیکم ورحمت اللہ برکاتہ

کیا فرماتے ہیں علمائے کرام اس مسئلہ کے بارے میں کہ کیا ناپاکی کی حالت میں روزہ رکھ سکتے ہیں یعنی کہ وہ شخص رات میں نیند کی حالت میں ناپاک ہو گیا اور سحری کے وقت آنکھ کھلی تو اسے معلوم ہوا کہ میں ناپاک ہوں اور اس نے سحری کر کے روزہ رکھ لیا تو کیا اس کا روزہ مانا جائے گا یا نہیںبحوالہ جواب عنایت فرمائیں عین نوازش ہوگی

     الســــاٸل محمد فاروق خان غازی پور الھند
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
        وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

          الجواب بعون الملك الوھاب

صورت مستفسرہ میں جواب یہ ہے کہ جنابت کی حالت میں صبح کی بلکہ اگر سارے دن جنب بےغسل رہا تو روزہ تو صحیح ہو جائے گا مگر اتنی دیر تک قصداً غسل نہ کرنا کہ نماز قضا ہو جائے گناہ وحرام ہےحدیث شریف میں آیا ہے کہجنب جس گھر میں ہوتا ہے اس میں رحمت کے فرشتے نہیں آتے(قانون شریعت جلد اول صفحہ نمبر 206)

                   واللہ تعالی اعلم بالصواب

                     کتبـــــــــــــــــــــــــہ 
محمد الطاف حسین قادری خادم التدریس دارالعلوم غوث الورٰی ڈانگا لکھیم پور کھیری یوپی الھند موبائیل فون/9454675382

ایک تبصرہ شائع کریں

براۓ مہربانی کمینٹ سیکشن میں بحث و مباحثہ نہ کریں، پوسٹ میں کچھ کمی نظر آۓ تو اہل علم حضرات مطلع کریں جزاک اللہ

فـہـرسـت گـــــروپ مـنـتـظـمـیـن

...
رابـطـہ کــــریـں

Whatsapp Button works on Mobile Device only