کیا خواتین اعتکاف میں بیٹھنے کے لئے حیض روکنے والی دوا استعمال کر سکتی ہے


             اَلسَلامُ عَلَيْكُم وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎

کیا فرماتے ہیں علمائے کرام ومفتیان عظام اس مسئلہ کے بارے میں کہ کیا خواتین شرعی عذر (حیض) روکنے کے لئے ٹیبلٹ یا انجکشن استعمال کر کے اعتکاف بیٹھ سکتی ہیں

 سائل محمد حسنین رضا پیلی بھیت شریف اتر پردیش
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
            وَعَلَيْكُم السَّلَام وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎

                  الجواب بعون الملک الوہاب 

جی ہاں خواتین حیض کو روکنے کے لیے ٹیبلٹ وغیرہ استعمال کر کے اعتکاف میں بیٹھ سکتی ہیں اور روزہ رکھنابھی فرض ہوجائے گاکیونکہ دم (خون)حیض کاآناہی نمازوروزہ اعتکاف وغیرہ کوروکتاہےہدایہ میں ہےوالحیض یسقط عن الحاٸض الصلاةویحرم علیھاالصوم (باب الحیض والاستحاضة)ج ١صفحہ ٦٣تنبیہ مگر اسلام اس فعل کی اجازت نہیں دیتا کیونکہ حیض کے خون کو روک لینا صحت کے لئے بہت مضر ھے اس سے بہت سی بیماریوں کے پیدا ہونے کا اندیشہ ہےبحوالہ فتاویٰ مرکزتربیت افتا۶ جلد١صفحہ ٤٧٧

                واللہ اعلم بـاالـــــــصـــــــــواب 

عبیداللہ بریلوی خادم التدریس مدرسہ دارارقم محمدیہ میرگنج بریلی شریف

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے