فرشتوں کے نام رکھنا کیسا ہے

السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

حضرت ایک سوال ہےکیا فرشتوں کا نام جیسے عزرائیل اسرافیل وغیرہ کیا ہم رکھ سکتے ہیں یا نہیں برائے مہربانی مکمل طور پر جواب عنایت فرمائیں عین نوازش ہوگی 

سائل محمد تبریز عالم دہلی 
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

الجواب بعون الملک الوہاب الھم ھدایت الحق والصواب

فرشتوں کےناموں پرنام رکھناممنوع ہےلہٰذا جبریل میکائیل یا عزرائیل وغیرہ نام رکھنےسےبچناچاہیےنبی پاک ﷺ نےارشادفرمایا( سموابأسماءالانبیاءولاتسموابأسماءالملائکۃ‘‘ترجمہ:انبیائےکرام علیہم السلام کےناموں پرنام رکھواورفرشتوں کے ناموں پر نام نہ رکھو التاریخ الکبیر للبخاری،ج5،ص35،دائرۃ المعارف،الھندحضرت علامہ ملاعلی قاری حنفی علیہ الرحمۃفرماتےہیں وکرہ مالک التسمی بأسماءالملائکۃکجبریل،قلت:ویؤیدہ ما رواہ البخاری فی تاریخ عن عبد اللہ ابن حرارسموابأسماءالانبیاءولاتسموابأسماءالملائکۃ) ترجمہ امام مالک علیہ الرحمۃنے فرشتوں کےناموں پرنام رکھنےکومکروہ قراردیاجیسے جبریل نام رکھنا۔میں کہتاہوں:اس بات کی تائیدوہ حدیثِ پاک کرتی ہےجسےامام بخاری علیہ الرحمۃ نےاپنی تاریخ میں حضرت عبداللہ بن حراررضی اللہ عنہ سےروایت کیاہےاوروہ یہ ہےکہ انبیائےکرام علیہم السلام کےناموں پرنام رکھو اورفرشتوں کےناموں پرنام نہ رکھو۔( مرقاۃ المفاتیح،ج9،ص10،مطبوعہ کوئٹہ ) نیزآپ علیہ الرحمۃحدیثِ پاک انبیائےکرام علیہم السلام کے ناموں پر نام رکھوکی شرح میں فرماتے ہیں تسموابأسماءالانبیاء ای دون الملائکۃ لماسبق ترجمہ انبیائےکرام علیہم السلام کے ناموں پر نام رکھویعنی نہ کہ فرشتوں کےناموں پراور ممانعت کی وجہ وہی ہے جوپہلےگزرچکی یعنی ممانعت والی حدیثِ پاک ( مرقاۃ المفاتیح،ج9،ص31،مطبوعہ کوئٹہ ) مفتی احمد یار خان نعیمی علیہ الرحمۃفرماتےہیں خیال رہےکہ ملائکہ کے نام پر نام رکھنا ممنوع ہےلہٰذاکسی چیز کا جبریل یا میکائیل نام نہ رکھو جیسا کہ حدیث میں ہے چنانچہ بخاری نےاپنی تاریخ میں ایک حدیث نقل کی کہ نبیوں کےناموں پرنام رکھو،فرشتوں کےنام پر نام نہ رکھو( مرآۃالمناجیح،ج6،ص407 نعیمی کتب خانہ،گجرات ) 

واللہ اعلم ورسولہ

کتـــــــــــــــــــــبہ غیاث الدین قادری دارالعلوم شھیداعظم دولہاپور گونڈہ

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے