4.04.2020

کھڑے ہو کر استنجاء کا پانی لینا کیسا ہے

             السلام علیکم و رحمۃ اللہ وبرکاتہ 

کیا فرماتے ہیں علمائے کرام ومفتیان عظام اس مسئلہ کے بارے میں کہ اگر کوئی شخص پیشاب کرکے کھڑا ہو گیا پھر وہ پانی لیا تو وہ نا پاک ہوگا یا نہیں برائے مہربانی مکمل طور پر جواب عنایت فرمائیں عین نوازش ہوگی 

              سائل معصوم رضا دیناجپوری
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
            وعلیکم السلام ورحمة الله وبركاته

                 الجواب بعون الملک الوہاب

صورت مسئولہ میں وہ شخص ناپاک نہیں ہوگاہاں اگر پیشاب کپڑے پہ ایک درہم سے زیادہ کی مقدار میں لگ گیا تو اسے پاک کرنا فرض ہے اگر ایک درہم کے مقدار لگاہے تو پاک کرنا واجب ہے  اور اگر ایک درہم سے کم کی مقدار میں لگا ہے تو پاک کرنا سنت ہے اگر پیشاب کپڑے میں ایک درہم سے زیادہ یا ایک درہم کے مقدار لگ گیا تو جس جگہ پیشاب کا قطرہ لگا ہے صرف اسی جگہ کو تین بار نچوڑ نچوڑ کے دھونے سے پاک ہوجائے گا _ مگر شخص مذکور ناپاک نہیں ہوگا _ کہ یہاں موجب غسل نہیں پایا جارہا ہے بہار شریعت حصہ دوم طہارت کا بیان

                     واللہ اعلم باالصواب

     کتبــــــــــــــــــــــــــہ محمـــد معصـوم رضا نوری
  
      منگلور کرناٹک انڈیا(۸ شعبان المعظم ١٤٤١؁ھ_) 

ایک تبصرہ شائع کریں

براۓ مہربانی کمینٹ سیکشن میں بحث و مباحثہ نہ کریں، پوسٹ میں کچھ کمی نظر آۓ تو اہل علم حضرات مطلع کریں جزاک اللہ

Whatsapp Button works on Mobile Device only