انگوٹھی میں پتھر کا نگ لگوانا کیسا ہے


                   اَلسَلامُ عَلَيْكُم وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎ 

جولوگ عقیق زمرد کے پتھر انگوٹھیوں میں پہنتے ھیں کہتیے ھیں فاٸدہ دیتےھیں شرعی طور پر کیا حکم ھے برائے مہربانی مکمل طور پر جواب عنایت فرمائیں عین نوازش ہوگی

               سائل محمد توصیف رضا رضوی
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
              وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ 

    الجواب بعون الملک الوہاب الھم ھدایت الحق والصواب 

صورت مسؤلہ میں پتھروں میں بھی تاثیر ہوتی ہے اور اللہ پاک نے ہی ان میں تاثیر رکھی ہے، کیونکہ مؤثرِ حقیقی اللہ کریم ہی کی ذات ہے۔احادیثِ مبارکہ میں بھی پتھروں کی تاثیر کا ذِکر ملتا ہے، جیساکہ حکیمُ الاُمّت حضرت مفتی احمد یار خان نعیمی رحمۃ اللہ علیہ فرماتے ہیں:عقیق کا نگینہ بہت مبارک ہے،حدیث شریف میں ہے:تَخَتَّمُوْا بِالْعَقِیْقِ فَاِنَّہٗ مُبَارَکٌ یعنی عقیق کی انگوٹھی پہنو کہ وہ مبارک یعنی برکت والی ہےمزید فرماتے ہیں:چاندی کی انگوٹھی میں عقیقِ سیاہ کا نگینہ بہت اعلیٰ ہے۔ بعض روایات میں ہے کہ پیلے یاقُوت کی انگوٹھی طاعون سے محفوظ رکھتی ہے۔ بعض میں ہے کہ عقیق کی انگوٹھی فقیری یعنی غربت دُور کرتی ہےفیضُ القدیر میں ہے عقیق کے نگینے والی انگوٹھی پہننے والے کو ہر قسم کی بھلائی ملے گی اور فرشتے اس سے محبت کریں گے۔اس کے خَواص یعنی خاصیتوں میں سے ہے کہ دل جھگڑنے کے وقت سُکون میں رہتا ہے اور نکسیر پھوٹنا ختم ہوجاتا ہے

                    واللّٰہ ورسولہ اعلم باالصواب

              کتبہ غیاث الدین قادری رضوی گونڈہ 

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے