6.26.2020

کیا لڑکی کا نکاح ماں کے خالہ زاد بھائی سے ہوسکتا ہے


              اَلسَلامُ عَلَيْكُم وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ 

کیا فرماتے ہیں علمائے کرام ومفتیان عظام اس مسئلہ کے بارے میں کہ کیا لڑکی ماں کےخالہ زاد بھاٸی سے نکاح کر سکتی ہے یہ درست ہے؟ برائے مہربانی جواب عنایت فرمایں

                     سائل محمد آصف رضا رضوی
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
                  وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ 

                      الجوابـــــ بعون الملکـــــ الوھاب 

جی ہاں لڑکی اپنی ماں کے خالہ زاد بھائی یعنی خلیرے ماموں سے نکاح کرسکتی ہے از روئے شرع کوئی ممانعت نہیں جبکہ اور کوئی مانع نکاح مثل رضاعت یا مصاہرت قائم نہ ہو جیساکہ ارشاد باری تعالیٰ ہے کہ حرمت علیکم امھاتکم و بناتکم و اخواتکم و عماتکم و خالاتکم و بنات الاخ و بنات الاخت و امھاتکم الّٰتی ارضعنکم و اخواتکم من الرضاعۃ و امھات نسائکم الّٰتی دخلتم ربائبکم الّٰتی فی حجورکم من نسائکم الّٰتی دخلتم بھن فان لم تکونوا دخلتم بھن فلا جناح علیکم و حلائل ابنائکم الذین من اصلابکم و ان تجمعوا بین الاختین الا ما قد سلف ان اللہ کان غفورا رحیما والمحصنات من النساء الا ما ملکت ایمانکم کتاب اللہ علیکم " یعنی حرام ہوئیں تم پر تمہاری مائیں تمہاری لڑکیاں تمہاری بہنیں تمہاری پھوپھیاں اور تمہاری خالائیں اور تمہاری بھتیجیاں اور تمہاری بھانجیاں اور تمہاری مائیں جنہوں نے دودھ پلایا اور دودھ کی بہنیں اور تمہاری عورتوں کی مائیں اور انکی بیٹیاں جو تمہاری گود میں ہیں ان بیبیوں سے جن سے تم صحبت کرچکے ہو تو پھر اگر تم نے ان سے صحبت نہ کی ہو تو انکی بیٹیوں میں حرج نہیں اور تمہاری نسلی بیٹوں کی بیبیاں اور دو بہنیں اکٹھی کرنا مگر جو ہے گزرا بے شک اللہ بخشنے والا مہربان ہے اور حرام ہیں شوہر دار عورتیں مگر کافروں کی عورتیں جو تمہاری ملک میں آجائیں یہ اللہ کا نوشتہ ( تحریر, حکم) ہے تم پر " اھ یہاں تک محرمات یعنی ان عورتوں کا ذکر ہوا جن سے نکاح حرام ہے پھر اسکے بعد اللہ تعالیٰ ارشاد فرماتا ہے کہ و احل لکم ماوراء ذالکم " یعنی اور انکے سوا جو رہیں وہ تمہیں حلال ہیں " اھ( پ:4/5/ سورۂ نساء)

                      واللہ تعالیٰ اعلم باالصواب 

کتبہ اسرار احمد نوری بریلوی خادم التدریس والافتاء مدرسہ عربیہ اہل سنت فیض العلوم کالا ڈھونگی ضلع نینی تال اتراکھنڈ 25---جون---2020---بروز جمعرات

ایک تبصرہ شائع کریں

براۓ مہربانی کمینٹ سیکشن میں بحث و مباحثہ نہ کریں، پوسٹ میں کچھ کمی نظر آۓ تو اہل علم حضرات مطلع کریں جزاک اللہ

فـہـرسـت گـــــروپ مـنـتـظـمـیـن

...
رابـطـہ کــــریـں

Whatsapp Button works on Mobile Device only