7.06.2020

ایک گاؤں میں دو مسجدیں ہوں تو جمعہ کس میں ادا کریں ؟

                   السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ

مسئلہ:۔ کیا فرما تے ہیں علمائے کرام اس مسئلہ میں کہ ایک گاؤں میں دو مسجدیں ہیں ایک پرانی اور ایک نئ تو جمعہ کس مسجد میں ادا کریں؟بینوا تو جروا 

                    المستفتی:۔عبد اللہ قادری 
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
               وعلیکم السلام و رحمۃ اللہ وبرکاتہ

                الجــــــــوابــــــــــ بعون الملک الوہاب

دیہات میں جمعہ وعیدین کی نماز جائز نہیں مگر حکم شرع یہ ہے کہ جہاں قائم ہے وہاں منع نہ کیاجا ئے اور جہاں قائم نہ ہو وہاں قائم نہ کیاجا ئے جیسا کہ سرکار اعلیٰ حضرت رضی اللہ عنہ تحریر فرما تے ہیں کہ خود نہ پڑھیں گے حکم پوچھا جائے گا تو فتوی یہ دیں گے جہاں نہیں ہوتے قائم نہ کریں گے باایں ہمہ اگر عوام پڑھتے ہوں منع نہ کریں گے۔(فتاوی رضو یہ جلد ۸؍ص ۴۳۹؍دعوت اسلامی ) خلاصہ کلام یہ ہے کہ جہاں پہلے سے قائم ہے یعنی پرانی مسجد میں وہیں پر نماز جمعہ ادا کی جا ئے اور نئ مسجد میں جمعہ نہ ادا کی جا ئے صرف پنچوقتی نماز ادا کی جا ئے اور اگر کچھ لوگ جمعہ میں شامل نہ ہوسکیں تووہ نئی مسجد میں جمعہ کے دن نماز ظہر باجماعت ادا کرلیا کریں

                          ۔واللہ اعلم بالصواب

کتبہ فقیر تاج محمد قادری واحدی ۱۳؍ ذی القعدہ ۱۴۴۱؁ھ  ۵؍ جولا ئی ۲۰۲۰؁ء بروز اتوار

ایک تبصرہ شائع کریں

براۓ مہربانی کمینٹ سیکشن میں بحث و مباحثہ نہ کریں، پوسٹ میں کچھ کمی نظر آۓ تو اہل علم حضرات مطلع کریں جزاک اللہ

فـہـرسـت گـــــروپ مـنـتـظـمـیـن

...
رابـطـہ کــــریـں

Whatsapp Button works on Mobile Device only