6.27.2021

جمعہ میں ایک ہی رکعت ملی تو نماز کا کیا حکم ہے؟

Gumbade AalaHazrat

سوال
  کیا فرماتے ہیں علمائے کرام ومفتیان عظام مسءلہ ذیل میں کہ کوئی شخص اس وقت نماز جمعہ کی جماعت میں شریک ہوا جب امام قعدہ میں بیٹھ چکا تھا اور اس شخص نے امام کے سلام پھیرنے کے بعد اپنی رکعت پوری کی تو کیا اس کی نماز جمعہ ہوءی یا نہیں حوالے کی روشنی میں جواب عنایت فرماءیں نوازش ہو گی تھوڑی جلدی جواب عنایت فرماءیں نوازش ہو گی۔ المستفتی عبدالرشید قادری بنارس ممبر آف 2️⃣گروپ یارسول اللہﷺ

       جواب

صورت مسٶلہ میں شخص مذکور کا جمعہ ہوگیا جیسا کہ حضور صدر الشریعہ رحمتہ اللہ تعالی علیہ فرماتے ہیں جس شخص نے جمعہ کاقاعدہ پا لیا یا سجدہ سہو کے بعد شریک ہوا اسے جمعہ مل گیا لہذا اپنی دو ہی رکعتیں پوری کرے

(بہار شریعت حصہ٤ ص٧٧٤ مکتبہ مدینہ دھلی)
واللہ ورسولہ اعلم بالصواب 

کتبہ عبیداللہ حنفی بریلوی

مدرسہ دارالعلوم ارقم میر گنج بریلی شریف

ایک تبصرہ شائع کریں

براۓ مہربانی کمینٹ سیکشن میں بحث و مباحثہ نہ کریں، پوسٹ میں کچھ کمی نظر آۓ تو اہل علم حضرات مطلع کریں جزاک اللہ

فـہـرسـت گـــــروپ مـنـتـظـمـیـن

...
رابـطـہ کــــریـں

Whatsapp Button works on Mobile Device only