مسجد پر اپنی ملکیت جمانا کیسا

Gumbade AalaHazrat

سوال
  کیا فرماتے ہیں علمائے کرام اس مسٔلے کے میں کہ اگر کسی نے مسجد تعمیر کی اور وہ فوت ہو گیا اب اس کے گھر والے کہتے ہیں کہ یہ مسجد ہماری ہے تو اس مسجد کا کیا حکم ہوگا المستفتی ۔۔۔ غلام جابر حسین

       جواب

مسجد اللہ ہی کےلیۓ ہے خواہ کسی نے بھی تعمیر کی ہو اھل محلہ نے یا کسی ایک فرد نے مگر مسجد اللہ ہی کےلیۓ ہے اس کو اپنی ملکیت گرداننا قطعا مناسب نہیں جیسا کہ قرآن میں اللہ تعالی ارشاد فرماتا ہے اَنَّ الْمَسٰجِدَ لِلّٰهِ بے شک مساجد اللہ کے لیۓ ہیں یعنی اسکی ملک ہیں

سورہ جن آیت ١٧
ہاں اس میں کوئی شک نہیں کہ جو مساجد تعمیر کرواتے ہیں یا اس میں اپنی حیثیت کے مطابق حصہ لیتے ہیں ودیگر ضروریات کو پر کرنا و دیکھ بھال صفاٸی ستھراٸی وغیرہ کا خیال کرتے ہیں تو پروردگار عالم ان کو بہترین صلہ عطا فرمائےگا ان کے لئے جنت میں مکان بنائے گا جیسا کہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا من بنی مسجدا یذکراللہ عزوجل فیہ بنی اللہ لہ بیتا فی الجنة

سنن نساٸی ، المجلد الاول ، کتاب الصلوة ، ص ٨٠ (مکتبہ تھانوی دیوبند) ھکذا فی صحیح البخاری ، المجلدالاوّل کتاب الصلوة ، ص ٦٤ (مجلس برکات مبارکپور)
واللہ ورسولہ اعلم بالصواب 

کتبہ عبیداللہ حنفی بریلوی

خادم مدرسہ دارارقم محمدیہ میر گنج بریلی شریف

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے